مدینہ منورہ میں شادی کی رسومات

جواب: مدینہ منورہ میں شادی بیاہ کی وہی رسومات تھیں جو اسلام سے پہلے عرب میں رائج تھیں ان میں کچھ طریقے اسلام کے نقطہ نظر سے ناجائز تھے اس لئے اسلام نے ان کی ممانعت کردی رسول اللہ ﷺ نے ایسے تمام اخلاقی طریقوں کو منع فرمادیا جو طریقہ اب مسلمانوں میں رائج ہے اس کی آپ نے اجازت دے دی ۔ نکاح و طلاق کے احکام میں اصطلاحات آپ ﷺ نے فرمائی ہیں وہ شریعت کا ہر طالبعلم جانتا ہے آپ ﷺ نے فرمایا کہ نکاح رضامندی سے ہونا چاہئے ۔نکاح اعلان کے ساتھ ہونا چاہئے۔ نکاح میں جو شرائط اور قیود رکھنی چاہییں ان کا ذکر قرآن اور حدیث میں صراحت سے ہوا ہے۔ جو چیزیں سراسرنا جائز تھیں ان کی آپ ﷺ نے ممانعت فرمائی ۔
 

(ڈاکٹر محمود احمد غازی)