کس فقیہہ کی رائے قبول کریں

جواب: آپ کی بات بالکل درست ہے اپنے نفس کی پیروی نہیں کرنی چاہئے اور اپنی ذاتی پسند نا پسند پر شرعی امور کا فیصلہ نہیں کرنا چاہئے طرز عمل یہ ہونا چاہئے کہ اللہ اور رسولﷺ نے جو حکم دیا ہے ہمیں اس کے مطابق چلنا چاہئے ۔جہاں اللہ اور اس کے رسولﷺ کے احکام کو سمجھنے میں کسی غیر معمولی گہرائی اور فہم کی ضرورت ہے تو اگر ہمیں کسی کے علم اور فہم پر اعتماد ہے تو اس کی فہم کے مطابق عمل کرنا چاہئے ۔اس معاملہ میں بہتر اور محتاط راستہ تو یہ ہے کہ آپ اپنی رائے پر عمل کرنے کے بجائے کسی ایسے صاحب علم کی رائے پر عمل کریں جس کے علم اور تقویٰ پر آپ کو اعتماد ہو ۔
 

(ڈاکٹر محمود غازی)