Khalid arbi

ڈاکٹر محمد خالد عاربی


مضامین

ایک دن میں اپنے کلینک میں بیٹھامریضوں کا معائنہ کر رہا تھا کہ ایک میڈیسن کمپنی سے متعلق ایک دوست کا فون آیا کہ ڈاکٹر صاحب آپ کو ترکی کی سیر نہ کروائی جائے،میں نے عرض کی کہ’’ کیوں نہیں، یقیناًکروائیں ،یہ بھی کوئی پوچھنے والی بات ہے۔‘‘وہ کہنے لگے کہ...


اتاترک اایئرپورٹ استنبول میں تقریباً دیئے گئے وقت پرہی جہاز استنبول کی فضاؤں میں پہنچ گیا اور جہاز کے ساؤنڈ سسٹم سے مسافروں کو لینڈنگ کی تیاری کی ہدایات دی جانے لگیں۔استنبول شہر پر سورج اپنی پوری آب و تاب سے چمک رہا تھا۔دور دور تک ،سبزہ،بلندو بال...


کلاک ٹاور  ہم جب بندرگاہ یا کونیالٹی بیچ کا نظارہ کر رہے تھے تو ایک طرف کوفصیل شہر بھی نظر آئی تھی جس کا تذکرہ پہلے کیا ہے۔یہ فصیل شہر معدوم ہو چکی ہے بس کہیں کہیں سے کچھ ٹکڑے بچے ہیں۔اس کے جو کھنڈرات باقی ہیں ،اُن میں سے ایک یہ کلاک ٹاور ہے۔ظاہر...


اردگان کے دیس میں ڈاکٹر خالد عاربی                                                                                                                        چھٹا دِن منگل ۔۲۵ ستمبر ۱۹۱۷ء آج کی صبح استنبول میں ہماری پہلی صبح تھی۔ ہوٹل میں آنکھ ک...


سفر نامہ قسط۔ہفتم اردگان کے دیس میں ڈاکٹر خالد عاربی                                                                                                قومِ ثمود:  وین کے ذریعے ہم اپنے ہوٹل کی طرف آرہے تھے،توکپاڈوشیا کا لینڈ سکیپ ایک بار پھرم...